Breaking NewsEducationتازہ ترین

جھگڑے میں ملوث طالبعلم کی ڈگری روکنے کا فیصلہ

بہاالدین زکریا یونیورسٹی میں طالبات کیساتھ بدتمیزی اور سکیورٹی گارڈ پر تشددکرنے والے طالبعلم کا کیس ڈسپلن کمیٹی کو بھجوا دیا گیا۔ڈگری روکنے کے لئے کنٹرولر امتحانات کو بھی لیٹر لکھ دیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں۔

زکریا یونیورسٹی : پشتون کونسل کے لیڈروں کا ’’سافٹ ویئر اپ ڈیٹ‘‘ ہوگیا

چندروز قبل ایک طالبعلم نے طالبات کے ساتھ بدتمیزی کی جسے وہاں سکیورٹی گارڈ نے روکا تو طالبعلم نے غنڈہ گردی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اسے تشدد کا نشانہ بنایا، اس واقعہ کی یونیورسٹی کی طلبہ تنظیموں کے عہدیداروں نے بھی مذمت کی۔

یہ بھی پڑھیں۔
زکریا یونیورسٹی میں دوسرے روز بھی دو لڑائیاں، سیکورٹی مزید سخت کردی گئی

سکیورٹی آفیسر زاہد اقبال خان نے ایکشن لیتے ہوئے انتظامیہ کو واقعہ سے تحریری طور پر آگاہ کیا، زکریا یونیورسٹی کے ریذیڈنٹ آفیسر پروفیسر طاہر اختر محمود کاکہنا ہے کہ ڈسپلن کی خلاف ورزیکسی طور پر بھی برداشت نہیں کی جاسکتی، رولز کے مطابق بلا امتیاز کارروائی کی جائے گی، یونیورسٹی میں بدتمیزی، جھگڑے، تشدد جیسے واقعات کیخلاف زیروٹالرنس ہے۔

دوسری جانب سکیورٹی آفیسر زاہد اقبال خان کا کہنا ہے کہ وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر منصور اکبر کنڈی اور آر اوپروفیسر طاہر اختر محمود کی ہدایات کے مطابق امن و امان ہر صورت میں برقرار رکھا جائے گا۔

اس سلسلے میں یونیورسٹی کا سکیورٹی سٹاف 24گھنٹے الرٹ اور چوکس ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں