Breaking NewsEducationتازہ ترین

زکریا یونیورسٹی میں طالب علم کو قتل کرنے والے آوٹ سائیڈر کو پھانسی کی سزا سنا دی گئی

بہاء الدین زکریا یونیورسٹی ملتان میں 14 اگست کو فوڈ سائنس کے طالبعلم کلیم اللہ سہو کو آوٹ سائیڈر اویس ارشد نے یونیورسٹی میں خنجر کے وار کر کےقتل کر دیا تھا ، جس کو پولیس نے عمر ہال سے موقع پر گرفتار کر لیا تھا ۔

یہ بھی پڑھیں ۔
جامعہ زکریا ملتان میں جمعیت کے رکن کلیم اللہ کوقتل کردیا گیا

کلیم اللہ سہو کو اویس جٹ نے یونیورسٹی انتظامیہ کو آئس پینے اور فروخت کرنے کے خلاف درخواست دینے پر قتل کیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں ۔

زکریا یونیورسٹی میں منشیات فروش کا طلباء پر وار، ایک قتل اور تین زخمی

اویس ارشد تقریباً دس سال سے یونیورسٹی میں رہائش پزیر تھا، اور یونیورسٹی میں منشیات فروشی اور چوری اور لڑکیوں کو ہراساں کرنے کے کئی کیسز میں ملوث تھا، مگر یونیورسٹی کے چند اساتذہ کی آشیر آباد سے کوئی کاروائی کبھی نہیں کی گئی۔

یہ بھی پڑھیں ۔
زکریا یونیورسٹی میں طالب علم کا قتل ، سی پی او ملتان کیمپس پہنچ گئے

14اگست کو کینٹین پر کلیم اللہ سہو اپنے دوستوں کے ساتھ بیٹھا تھا، جس پر اویس جٹ نے کلیم اللہ سہو کو خنجر کے وار کر کے قتل اور اس کے ساتھ تین دوستوں کو شدید زخمی کردیا تھا۔

یہ بھی پڑھیں ۔
کلیم اللہ قتل کیس : اسلامی جمعیت طلباء کا مظاہرہ، ہاسٹل وارڈن اور سپرنٹنڈنٹ کے خلاف کارروائی کا مطالبہ

جرم ثابت ہونے پر قاتل اویس ارشد جٹ کو سیشن کورٹ نے سزائے موت سُنادی، اورچھ لاکھ جرمانہ بھی عائد کیا گیا ۔

یہ بھی پڑھیں ۔
کفر ٹوٹا خدا خدا کرکے ؛ گورنر نے کلیم اللہ کے قتل کا نوٹس لےلیا، انکوائری تشکیل

عدالت کے فیصلہ کے بعد کلیم اللہ سہو کے والد سلیم جاوید نے کہنا ہے کہ اللہ پاک بڑا غفور الرحیم وہ ظالم کو اپنے انجام تک پہنچا ہی دیتا ہے۔

آج حق کی فتح ہوئی اور ہم کو انصاف مل گیا، مگر یونیورسٹی انتظامیہ کا کرادار آج بھی مشکوک ہے ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں