Breaking NewsNationalتازہ ترین

حکمرانوں کو صرف اپنے کرسی جانے کا خوف ہے:عمران خان

چئیرمین تحریک انصاف عمران خان کا کہنا ہے کے اس سیلاب کی شدت دو ہزار دس کے سیلاب سے کہیں زیادہ ہے ، یہ بات انہوں نے تونسہ کی بستی چھتانی میں سیلاب متاثرین سے ملاقات کے بعد ان سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔

انکا کہنا تھا کے ہمیں سیلاب کی شدت سے بچنے کے کئے چھوٹے چھوٹے ڈیم بنانا ہوں گے، میرا یہاں آنے کا مقصد ریلیف کے کاموں کو دیکھنا تھا ۔

انکا کہنا تھا کے حکمرانوں کو صرف اپنے کرسی جانے کا خوف ہے، وہ اپنی کرپشن پکڑے جانے کے خوف میں مبتلا ہیں۔

عمران خان کا کہنا تھا کے امپورٹڈ حکومت سیلاب متاثرین کے لئے پیسے اکھٹے کرنے کے لئے کی جانے والی ٹیلی تھون کو کیبل آپریٹر کے زریعے بند کرا دیتے ہیں، ہم ہر طرح سے اپنی قوم کی مدد کر یں گے۔

انکا کہنا تھا کے سندھ میں اگر دریائے سندھ کے رائٹ بینک فال کینال بنا دیتے تو سیلاب کی اتنی شدت نا ہوتی ،انہوں نے وفاقی حکومت سے مطالبہ کیا کے انڈس ہائی وے کو جلد از جلد مکمل طور پر آپریشنل کیا جائے۔

انکا کہنا تھا کے تونسہ میں دس ارب کی لاگت سے سوار ڈیم بنا رہے ہیں، اس سے کوہ سلیمان سے آنے والے پانی کی تباہی میں کمی ہو گی، اور لاکھوں ایکڑ رقبہ بھی قابل کاشت ہو جائے گا ۔

انکا کہنا تھا کے وہ وزیر اعلی پنجاب سے درخواست کرتے ہیں کے تونسہ کو ضلع کا درجہ دے دیں ، ہم نے اپنی پچھلی دور حکومت میں تمام ہوم ورک اس پر مکمل کرلیا تھا ۔

انکا کہنا تھا کے انہوں نے دو گھنٹے کی ٹیلی تھون سے دس ارب روپے اکھٹے کئے ، میری قوم نے اتنے کم وقت میں اتنی زیادہ پیسے پہلے کبھی نہی دئیے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں