Breaking NewsEducationتازہ ترین

مسز شازیہ بانو کامیاب پبلک ڈیفنس کے بعد شعبہ اسلامیات کی پہلی پی ایچ ڈی ڈاکٹر بن گئیں

ویمن یونیورسٹی کے سکالر مسز شازیہ بانو کامیاب پبلک ڈیفنس کے بعد شعبہ اسلامیات کی پہلی پی ایچ ڈی ڈاکٹر بن گئیں ۔

ان کے مقالے کا عنوان’’مولانا عبدلقادر رائے پوری کی دینی فکر میںسماجیات کا تصور ‘‘ تھا۔

عوامی دفاع کی تقریب کچہری کیمپس کے ایڈمن بلاک میں ہوئی، جس کی مہمان خصوصی وائس چانسلر پروفیسر ڈاکٹر عظمیٰ قریشی تھیں۔

اس موقع پر انہوں نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ یہ بات خوش آئند ہے کہ ہمارے دیگر شعبوں سے بھی پی ایچ ڈی سکالر سامنے آنے لگی ہے۔

شعبہ اسلامیات کی پہلی پی ایچ ڈی کرنے پر ان کے اساتذہ کو مبارکباد پیش کرتی ہوں اور امید ہے کہ مستقبل قریب میں یہ شعبہ ریسرچ میں اپنا منفردنام بنائے گا ۔

سکالر شازیہ بانو نے جو ٹاپک چنا وہ موجودہ ادوار کے حوالے سے بہت اہم ہے مولانا شاہ عبدالقادر رائے پوری شاہ عبدالرحیم رائے پوری کے روحانی جانشین تھے۔

ان کی زندگی اللہ رب العزت سے عقیدت اور پرعزم دعاؤں سے بھری ہوئی تھی۔ مولانا عبدالرحیم اپنے شاگرد کی تقویٰ اور روحانی ترقی سے خوش تھے۔

اپنے شیخ کی رحلت کے بعد وہ لوگوں کو اللہ سے جوڑ کر اور ان کے دلوں میں اللہ کی محبت ڈال کر فائدہ پہنچاتے رہے۔ مولانا رائے کی پوری زندگی اور کام امت مسلمہ کے لیے بہت سے قیمتی اسباق دیتے ہیں۔

ڈاکٹر شازیہ بانو نے مولانا رائے پوری کے مذہبی نظریے کے سماجی پہلو کو روشن کرنے کی کوشش کی یہ کاوش کامیاب رہی۔

ڈاکٹر شازیہ بانو نے اپنا تحقیقی مقالہ ڈاکٹر کلثوم پراچہ اور ڈاکٹر ضیاء الرحمان کی نگرانی میں مکمل کیا۔

اس موقع پر ڈاکٹر کلثوم پراچہ کا کہنا تھا کہ ویمن یونیورسٹی میں کوالٹی ریسرچ ہورہی ہے، پی ایچ ڈی کے مسلسل پبلک ڈیفنس ہماری اساتذہ کی کارکردگی کا منہ بولتا ثبوت ہے ۔

تقریب میں ڈاکٹر حنا علی اور دیگر اساتذہ نے شرکت کی۔

آخر میں تمام شرکا نے کامیاب مجلسی دفاع پر ڈاکٹر شازیہ بانو کو مبارکباد پیش کی۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں