Breaking NewsNationalتازہ ترین

20 مئی کے بعد کسی بھی دن اسلام آباد کی کال دوں گا :عمران خان

سابق وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ حقیقی آزادی کی تحریک کا میانوالی سے آغاز کررہا ہوں، 20 تاریخ کے بعد کسی بھی دن اسلام آباد مارچ کی کال دے سکتا ہوں۔

چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے ہوم گراؤنڈ میانوالی میں جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ عوام کا سمندر دیکھ کر اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں، کہ عوام میں شعور پیدا ہوا ہے، اور میری قوم کو جگایا ہے، میں اللہ کا شکر ادا کرتا ہوں کہ اس نے قوم کو لاالہ الااللہ کا مطلب سمجھادیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آپ لوگوں کو کبھی نہیں بھولوں گا، جب کسی نے مجھے ووٹ نہیں دیا تو میانوالی والوں نے مجھے جتایا، میانوالی کے لوگوں نے مجھے پہلی بار منتخب کیا، انہوں نے کہا کہ حقیقی آزادی کی تحریک کا میانوالی سے آغاز کررہا ہوں، 20 تاریخ کے بعد کسی دن بھی اسلام آباد مارچ کی کال دے سکتا ہوں، جب اسلام آباد کی کال دوں گا تو آپ آئیں گے۔

عمران خان نے سوال کیا کہ ڈاکوؤں کی حکومت نے کنٹینر رکھے تو ہٹادو گے؟، نہ 18 قتل کرنے والے رانا ثناء اللہ آپ کو روکے گا، نہ یہ جوتے پالش کرنے والاچیری بلاسم آپ کو روکے گا۔

انہوں نے کہا کہ جب تک زندہ ہوں میرا وعدہ ہے کبھی کسی کے سامنے جھکنے نہیں دوں گا، ڈاکو مجھے نیازی کہتے ہیں تو مجھے اچھا لگتا ہے، میں ان چوروں کا شکر ادا کرتا ہوں، جب تک چور جیلوں میں نہیں جائیں گے جہاد کرتا رہوں گا، جب تک یہ چور جیلوں میں نہیں جائیں گے میں جہاد کرتا رہوں گا۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ امریکا سے سازش شروع ہوئی، امریکا نے ہمارے میرجعفروں میر صادقوں کے ساتھ ملکر منتخب حکومت ہٹایا، چیری بلاسم کہتا ہے عوام کو غلامی کرنی پڑے گی، میں کہتا ہوں تم امریکا کے غلام ہو، ہم تو صرف اوپر والے کی غلامی کرتے ہیں، ہم محمدﷺ کی امت سے ہیں، کسی سپر پاور کے آگے نہیں جھکتے، ہمارے نبیﷺ نے ہمیں خودداری اور غیرت دی، قرآن میں اللہ نے کہا انسان کو اشرف المخلوقات بنایا ہے۔

چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ انسان فرشتوں سے اوپر ہے اور گرتا ہے تو جانور بن جاتا ہے، قائداعظم محمد علی جناح کبھی امریکا کی غلامی نہ کرتے جو یہ چوروں نے کرائی، آج قوم ایک چیز پر کھڑی ہے، دوستی سب سے مگرغلامی کسی کی نہیں کرینگے۔

انہوں نے کہا کہ میانوالی کے لوگوں ہمیں غصہ دو وجہ سے ہے، امریکا نے ہمارے سفیر کو واشنگٹن میں بلا کر کہا عمران خان کو ہٹاؤ، امریکا کہتا ہے عمران خان کو نہ ہٹا تو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا، امریکا کہتا ہے چیری بلاسم کو لے آئے تو پاکستان کو معاف کردینگے، انہوں نے کہا کہ پاکستان کے عوام نہ جھکتے ہیں اور نہ کسی خوف کے بت کی پوجا کرتے ہیں، عظیم قوم زرداری، نواز شریف، چھوٹا شریف اور اسکے بیٹے کی غلامی نہیں کریگی، ہم کسی صورت ان چوروں کو اپنے اوپر مسلط نہیں ہونے دینگے، ہم بھکاری نہیں ہمارا ملک کلمہ طیبہ کے نعرے پر بنا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ چوروں نے میرے خلاف ایف آئی آر کاٹی، راشد شفیق کو ائیرپورٹ سے پکڑ کر جیل میں ڈالا، مدینہ میں جو آپ کیخلاف آواز اٹھی کہتے ہیں یہ ہم نے کرایا، میرا چیلنج ہے دنیا میں جہاں بھی پاکستانی ہیں وہاں سے چور اور غدار کی آواز آئے گی، موٹروے پر شہبازگل پر چوروں نے حملہ کرایا، کسی کارکن کو کچھ ہوا تو تھری اسٹوجز اور ان کے ہینڈلرز ذمہ دار ہوں گے، رانا ثناء اللہ وہ غنڈہ ہے جس نے سب سے زیادہ پولیس مقابلوں میں لوگوں کو مروایا۔

انہوں نے کہا کہ یہ سوشل میڈیا کا زمانہ ہے اب اس قوم کو کوئی کنٹرول نہیں کرسکتا، اسلام آباد میں عوام کا سمندر آنے والا ہے، میرا چیلنج ہے تاریخ میں کبھی اتنی تعداد میں عوام اسلام آباد نہیں پہنچی ہوگی، 26 سال سے جلسے کررہا ہوں مگر میانوالی کی تاریخ میں اتنا بڑا جلسہ نہیں دیکھا۔

چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ ڈاکوؤں کا پلندہ اور ان کو لانے والے سمجھتے ہیں قوم تھک جائیگی، قوم ابھی تیاری کررہی ہے ابھی تو پارٹی شروع ہوئی ہے، عمران خان نے کہا کہ بتایا جائے میں نے ایک بھی پراپرٹی ملک سے باہر خریدی ہو۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ جب حکومت سنبھالی تو پاکستان دیوالیے پر تھا، کورونا کے باوجود ہم نے خسارہ 11 سال میں سب کم کیا، کورونا سے اپنے لوگوں ،غریبوں اور معیشت کو بچایا، پاکستان کی تاریخ میں کبھی اتنے ڈالر نہیں آئے جتنے ہمارے دور میں آئے، ہماری حکومت نے سب سے زیادہ ٹیکس جمع کیا، فصلوں کی ریکارڈ پیداوار ہوئی۔

انہوں نے کہا کہ میانوالی سے پاکستانیوں کو پیغام دینا چاہتا ہوں، اسلام آباد میں تحریک انصاف نہیں بلکہ پوری قوم کو بلا رہا ہوں، میں اپنے دلیر نوجوانوں کو اسلام آباد بلا رہا ہوں، یہ پاکستان کا معاملہ ہے آپ سب اسلام آباد بوٹ پالشوں کو پیغام دیں اسلام آباد آکر پیغام دیں غلامی نامنظور،امپورٹڈ حکومت نامنظور،الیکشن کراؤ، ۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ ملک میں فوری الیکشن کرائیں جائے فیصلہ عوام کرے گی امریکا نہیں۔انہوں نے کہا کہ پنجاب کے اندر ہماری حکومت گرائی گئی، انصاف کے اداروں سے پوچھتا ہوں کہ کیا آپ کو سوموٹو نہیں لینا چاہیے تھا، کبھی سنا ہے کہ ووٹ اپنے حلقے سے لیں اور سودا کہیں اور جا کر کریں، کبھی سنا ہے یورپ، آسٹریلیا یا نیوزی لینڈ میں کوئی اپنا ضمیر بیچ دے، جو ملک اسلام کے نام بنا اس کے ایم پی ایز نے خود کو بھیڑ بکڑیوں کی طرح بیچ دیا، کبھی دیکھا ہے ممبران اسمبلی ضمیر بیچیں اور انصاف کے ادارے خاموش رہیں۔

عمران خان نے کہا کہ جو اپنے ملک، آئین حلقے کے لوگوں سے غدار کرتے ہیں آپ نے انھیں سبق سکھانا ہے، سبق سکھانا ہے کہ ایسے ساری زندگی اپنا ضمیر بیچنے سے ڈریں، پاکستانیوں سنو یہ لوٹے کسی بھی حلقے میں آئیں تو آپ نے انکا بندوبست کرنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ آپ نے فیصلہ کرنا ہے کہ کیا اللہ کے حکم پرچلیں گے، اللہ ہمیں حکم دیتا ہے کہ حق کیساتھ کھڑے ہو اچھائی کیساتھ کھڑے ہو، نیوٹرل صرف جانور ہوتا ہے انسان نہیں، اللہ نے انسان کو عقل دی ہے، جو چوروں کے خلاف جہاد کرے انکے ساتھ کھڑے ہوجاؤ۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ صحیح فیصلہ کیا تو 75 سالوں میں وہ قوم بنے گی جس کا خواب اقبال نے دیکھا، ان چوروں کو اوپر لانے کیلئے پاکستان نہیں بنا تھا، یہ چوروں کیخلاف صرف جہاد نہیں بلکہ یہ حقیقی آزادی کی جنگ ہے، مجھے پاکستان کا سنہری وقت نظرآرہاہے۔

انہوں نے کہا کہ اس سے پہلے اس جیسا جوتے پالش کرنیوالا چیری بلاسم ملکی تاریخ میں نہیں آیا، چیری بلاسم کا بیٹا، داماد، ان کا منشی اسحاق ڈار ملک سے باہر بھاگا ہوا ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں