Breaking NewsEducationتازہ ترین

سرکاری سکولوں میں میاواکی جنگل اگانے کے احکامات

موسمیاتی تبدیلی کے خطرات سے نمٹنے، طلبہ کو سرسبز و شاداب ماحول کی فراہمی اور درختوں کی کمی کو پورا کرنے کے لیے سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ جنوبی پنجاب کا اہم اقدام۔

جنوبی پنجاب کے سرکاری سکولوں میں میاواکی جنگل اگانے کے احکامات، پہلے مرحلے میں 43 تحصیلوں کے 256 منتخب سکولوں میں آج (7 ستمبر کو) میاواکی جنگل اگائے جائیں گے۔

ملتان میں میاواکی جنگل اگانے کی مرکزی تقریب گورنمنٹ بوائز کمپری ہنسیو ہائیر سکینڈری سکول میں ہو گی ،جس میں سیکرٹری سکول ایجوکیشن اور سیکرٹری جنگلات میاواکی جنگل قائم کرنے کے سلسلے میں شجرکاری کریں گے۔

تفصیلات کے مطابق موسمیاتی تبدیلی کے خطرات سے نمٹنے، طلبہ کو سرسبز و شاداب ماحول کی فراہمی، ماحولیاتی نظام کی تشکیل اور درختوں کی کمی کو پورا کرنے کے لیے سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ جنوبی پنجاب نے تمام سرکاری سکولوں میں میاواکی جنگل اگانے کے احکامات جاری کیے ہیں۔

پہلے مرحلے میں آج 43 تحصیلوں کے 256 منتخب سکولوں میں محکمہ جنگلات کے تعاون سے میاواکی جنگل اگائے جائیں گے۔

اس سلسلے میں مرکزی تقریب گورنمنٹ بوائز کمپری ہنسیو ہائیر سکینڈری سکول ملتان میں ہو ئی، جس میں سیکرٹری سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ جنوبی پنجاب ڈاکٹر احتشام انور اور سیکرٹری جنگلات جنوبی پنجاب سرفراز مگسی میاواکی جنگل قائم کرنے کے سلسلے میں شجرکاری کریں گے۔

میاواکی جنگل کی تکنیک کے ذریعے قدرتی جنگلات سے دس گنا تیز اور تیس گنا گھنے جنگل اگائے جاتے ہیں۔

سیکرٹری سکول ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ جنوبی پنجاب ڈاکٹر احتشام انور نے اس حوالے سے تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ موسمیاتی تبدیلی کے اثرات سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے ممالک میں پاکستان پانچویں نمبر پر ہے، اس مسئلے کا تدارک کرنا ہماری موجودہ اور آنے والی نسلوں کی بقا کا مسئلہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ شہروں اور دیگر گنجان آباد علاقوں میں چونکہ آلودگی زیادہ ہوتی ہے اور درخت کم، اس لیے سکولوں میں میاواکی جنگل ماحول کے لیے زیادہ فائدہ مند ثابت ہوں گے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں