Breaking NewsSportsتازہ ترین

پاکستان ویسٹ انڈیز سیریز : ریکارڈز کے ڈھیر لگ گئے

ملتان کے گرم موسم جب درجہ حرارت 47 سنٹی گریڈ ہو میں کرکٹ کھیلنا خود ایک بڑا ریکارڈ ہے، مگر ایسے سخت موسم میں کھلاڑیوں نے اپنی پروفارمنس اورفٹنس سے پاکستان کو متعدد ریکارڈ سے نواز دیا۔

اس سیریز کی سب سے بڑی کامیابی ورلڈ سپر لیگ کے پوائنٹس ٹیبل پر چوتھی پوزیشن لینا تھی یہ ٹارگٹ دوسرے ون ڈے میں جیت کے ساتھ ہی حاصل کرلیا تھا۔

اس سے قبل پاکستان اور ویسٹ انڈیز 80۔80 پوائنٹس کے ساتھ برابر تھے ،جیت کے بعد پاکستان چوتھی پوزیشن پر آگیا۔

آخری میچ میں اس پوزیشن کو مستحکم کرنے کے لئے جیت ضروری تھی، جس میں 53 رنز کی جیت سے اس کو 30پوائنٹس حاصل ہوئے اس طرح اب چوتھی پوزیشن پر مستحکم ہوکر کھڑا ہے ۔

اس کے علاوہ پاکستان اور ویسٹ انڈیز کی ایک روزہ سیریز کے اختتام پر بیٹنگ میں امام الحق دونوں جانب سے 199 رنزبناکر ٹاپ اسکورر کا اعزاز حاصل کرگئے ۔
اس بنا پر وہ مین آف دی سیریز قرار پائے ہیں۔

بابر اعظم 181 رنزکے ساتھ دوسرے اور شائی ہوپ نے 152 رنزبناکر تیسری پوزیشن حاصل کرلی۔شمرا بروکس 130 کے ساتھ چوتھے اور شاداب خان 114 رنزکے ساتھ 5 ویں نمبر پر آئے ہیں۔

باؤلنگ کے میدان میں دونوں سائیڈز کے پیسرز کو ملتان کی پچزنے گھاس نہیں ڈالی ہے۔

سپنرز شاداب خان اور محمد نواز 3میچز میں 7 وکٹ کے ساتھ ٹاپ کرگئے ہیں۔ عقیل حسین  5 کے ساتھ دوسرے اور  نکولس پورن کے ساتھ محمد وسیم،جوزف اور حارث رئوف 4،4 وکٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔

اس سیریز کے ٹاپ اسکورر امام الحق مین آف دی سیریز قرار پائے ہیں۔

شاداب خان نے پاکستان کے لئے 86 رنزکی شاندار اننگ کھیلی۔انہوں نے شاہدخان آفریدی کا ریکارڈ توڑ دیاہے۔

انہوں نے نمبر 7 پر بیٹنگ کرتے ہوئے 86 رنزکی اننگ کھیلی،اسی نمبر پر ایک روزہ کرکٹ میں شاہد آفریدی نے 85 رنزبنائے تھے۔

اتفاق سے شاہد خان آفریدی نے 2008 میں ملتان میں بنایا تھا،زمبابوے کے خلاف  یہ اننگز تھی۔ آفریدی نے بھی ملتان میں یہ اننگ کھیلی تھی۔

شاداب خان نمبر 7 پرکھیلتے ہوئے سنچری نہ بناسکے، اس نمبر پر وہ سنچری کرتے تو پاکستان کے دوسرے بیٹر بن جاتے۔

عبد الرزاق جنوبی افریقا کے خلاف 2010 میں ابو ظہبی میں سنچری کا ریکارڈ رکھتے ہیں۔

اس کے علاوہ امام الحق نے سیریز میں تیسری ہاف سنچری اسکور کرکے آئی سی سی ایک روزہ ون ڈے رینکنگ میں دوسری پوزیشن پر قبضہ جمالیا ہے۔

انہوں نے بھارت کے ویرات کوہلی کو پیچھے چھوڑدیا ہے۔موجودہ آئی سی سی درجہ بندی کے مطابق پاکستان کے بابر اعظم 891 ریٹنگ کے ساتھ پہلے،ویرات کوہلی 811 کے ساتھ دوسرے اور امام الحق 807 ریٹنگ کے ساتھ تیسرے نمبر پر تھےش بدھ کے میچ سے قبل تک امام الحق کے 795 ریٹنگ پوائنٹس تھے۔

آئی سی سی بدھ کو آفیشل رینکنگ جاری کرے گی، لیکن امام کی آج کی ہاف سنچری اننگ کی بدولت وہ دوسرے نمبر پر آگئے ہیں۔

اس طرح بابر اعظم تو کیا ،امام الحق نے بھی ویرات کوہلی کو پچھاڑ دیا ہے۔یوں طویل عرصہ بعد آئی سی سی ایک روزہ ون ڈے رینکنگ میں ٹاپ 2 پوزیشنز پر پاکستان کا قبضہ ہوگیا ہے۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں