Breaking NewsEducationتازہ ترین

میڑک اور انٹر کے طلباء کےلئے گریڈز جاری کرنے کافیصلہ نہ ہوسکا

میٹرک اور انٹر کے امتحان میں بچوں کو گریڈز جاری کرنے کے حوالے سے سمری تاحال منظور نہ ہوسکی۔

بتایا جارہا ہے کہ ،واں سال بچوں کو رزلٹ کارڈ پر گریڈز کے ساتھ نمبر بھی جاری کیے جائیں گے، امتحان پاس کرنے کیلئے تمام مضامین میں 33 فیصد نمبر لینا لازمی ہوگا۔

محکمہ ہائر ایجوکیشن نے سمری منظوری کیلئے کیبنٹ کمیٹی کو ارسال کر رکھی ہے۔

تعلیمی بورڈز نے 2019 میں بچوں کو گریڈز دینے کے حوالے سے سمری تیار کی تھی۔تین سال بعد رزلٹ کارڈ میں بچوں کے نمبرز ختم کرکے تعلیمی بورڈز کو گریڈنگ سسٹم پر منتقل ہونا تھا۔

پہلے سال رزلٹ کارڈ پر صرف نمبرز ،دوسرے سال نمبرز کے ساتھ امیدوار کو گریڈز بھی دیے جانے تھے۔

تیسرے سال بچوں کے رزلٹ کارڈز پر بچوں کو نمبرز کی بجائے صرف گریڈز دیے جانےتھے۔

پالیسی کامقصد بچوں کو گریڈز دے کر ان کے فیل ہونے کی پرسنٹیج کو کم کرنا تھا،ملکی سیاسی صورتحال کے پیش نظر تاحال سمری منظور نہیں کی جاسکی۔

سمری منظور نہ ہونے کے باعث رواں سال بچوں کو گریڈز کے ساتھ نمبرز بھی دیے جائیں گے۔

چار مضامین میں فیل ہونے والے بچے ضمنی امتحان میں شرکت کرسکیں گے،سٹوڈنٹس کیلئے سپلمنٹری امتحان 4 سال میں پاس کرنا لازمی ہوگا ۔

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button

پاکستان میں کرونا وائرس کی صورت حال

گھر پر رہیں|محفوظ رہیں